سعودیہ میں جعلی اقامے اورڈرائیونگ لائسنس بنانے والا پاکستانی شہری گرفتار

پاکستانی نے جعلی سرکاری دستاویزات تیار کرنے کے لیے ایک گروہ بنا رکھا تھا، جس کے پاس تھرمل مشین اور جدید ترین پرنٹرز بھی موجود تھے

سعودیہ میں جعلی اقامے اورڈرائیونگ لائسنس بنانے والا پاکستانی شہری گرفتار
سعودیہ میں جعلی اقامے اورڈرائیونگ لائسنس بنانے والا پاکستانی شہری گرفتار
سعودیہ میں جعلی اقامے اورڈرائیونگ لائسنس بنانے والا پاکستانی شہری گرفتار

 سعودی پولیس نے جعلی اقاموں کے غیر قانونی دھندے میں ملوث پاکستانی کو گرفتار کر لیا ہے جو جعلی اقاموں، ڈرائیونگ لائسنس، بیماری کے لیے ہیلتھ سرٹیفکیٹ سمیت دیگر جعلی سرکاری دستاویزات تیار کر کے انہیں مہنگے داموں فروخت کرتا تھا۔ ریاض پولیس نے مخبری کے بعد اس گروہ کے تمام ارکان کو گرفتار کر لیا۔
وزارت داخلہ کی جانب سے اس کارروائی کی ویڈیو بھی جاری کی گئی ہے جس میں ملزم کے ٹھکانے پر جعلسازی میں استعمال ہونے والا سامان دکھایا گیا۔ پولیس کے مطابق ملزم کے پاس جعلی دستاویزات تیار کرنے کے لیے جدید ترین پرنٹرز اور ایک تھرمل مشین بھی موجود تھی۔ اس کے علاوہ لیپ ٹاپ، متعدد جعلی ڈرائیونگ لائسنس اور اقامے بھی برآمد ہوئے ہیں۔
پاکستانی ملزم کے خلاف جعلسازی کا مقدمہ درج کر کے اسے سرکاری استغاثہ کے حوالے کر دیا گیا ہے جو اسے چند روز میں عدالت میں پیش کر دے گا۔

اس سے قبل 4 پاکستانیوں کے گینگ کو پولیس نے جعلی اقاموں کے کاروبار پر گرفتار کیا تھا۔ پولیس کے مطابق یہ چاروں افراد ریاض کے مرکزی شہر میں واقع اپنی رہائش گاہ میں جعلی اقاموں کا کاروبار کر رہے تھے۔ ملزمان غیر قانونی طور پر مقیم تارکین اور سرحدوں سے چھُپ چھپا کر داخل ہونے والوں کو جعلی اقامے تیار کر کے دیتے تھے۔ ان کے قبضے سے 371 جعلی اقامے بھی برآمد ہوئے۔